سائنس اور ٹیکنالوجی

گوگل کی چیٹنگ ایپ’آلو’مارچ میں بند ہو جائے گی

نیویارک: گوگل اپنی چیٹنگ میسنجر  ایپ  آلو (Allo ) کو بند کرنے کا سوچ رہی ہے، لیکن کچھ لوگ قیاس آرائی سے کام لے رہے تھے کہ ہو سکتا ہے یہ ہینگ آﺅٹ کی بات ہولیکن یہ تمام افواہیں جھوٹی ثابت ہوئی جب گوگل نے تصدیق کی کہ وہ آلو  کو 2019 میں بند کر دیں گے۔ گوگل ذرائع کا کہنا تھا کہ آلو مارچ 2019 تک کام کرتی رہےگی،مارچ تک صارفین اپنی چیٹنگ کی ہسٹری کاتبادلہ کر سکتے ہیں، اس بارے میں رہنمائی گوگل معاون سے لی جا سکتی ہے۔ گوگل ذرائع کا کہنا ہے کہ
ہینگ آﺅٹ کے بارے میں اپنا پلان تفصیل سے دیں گے اورمزید یہ کہ وہ ‘آلو’ میں کچھ  فیچرز بدلنا چاہتے ہیں۔ وہ صارفین جو یہ ایپ باقائدگی سے استعما ل کرتے ہیں وہ بہت جلد ہینگ آﺅٹ کو  دوبارہ سے بھرپور استعما ل کریں گے۔گوگل نے اپنے صارفین سے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہم معذرت خواہ ہیں کہ’آلو’مختصر وقت کا پروجیکٹ رہی ہےلیکن ایپ کو اچانک بند نہیں کیا جا رہا اس پر ایک سال سے کام جاری ہے اور ہم اپنے صارفین کو وقت پر مدد فراہم کرنے کے لیے پر عزم ہیں،مزید یہ کہ گوگل اینڈرائیڈ  اور  آرسی ایس  ایپس پر کام کر رہا ہےجو کہ موجودہ دور کی اہم ضرورت ہے۔ 

To Top