سائنس اور ٹیکنالوجی

دنیا کا سب سے چھوٹا روبوٹ,حجم صرف ایک سکے کے برابر

دنیا کا سب سے چھوٹا روبوٹ تیار کرلیا گیا!امریکہ کے انجینئرز نے دنیا کا سب سے چھوٹا روبوٹ تیار کرلیا جس کا وزن صرف 1۰48 گرام ہے اور یہ روبوٹ ایک چھوٹے سکے جتنے حجم کا ہے۔ ہارورڈ یونی ورسٹی کے انجینئرز نے اس روبوٹ کو تیار کیا اور خاص بات یہ کہ اس روبوٹ کے چاروں طرف چپکنے والے پاؤں بھی بھی ہیں,ان چپکنے والے پیروں کی مدد سے یہ روبوٹ ایسی تنگ اور پیچیدہ جگہوں سے گذر سکتا ہے جہاں انسان کی رسائی ممکن نہیں۔اس روبوٹ کی تکنیکی خصوصیات کے بنیاد پر اسکا نام

ارورڈ ایمبیولٹری ماِئیکرہ روبوٹ ود الیکٹرو ایڈ ہیسن (Harvard Ambulatory Micro Robot with Electro Ad Hesion) رکھا گیا ہے۔ اس ننھے روبوٹ کے خاص چپکنے والے پیروں میں جوڑ لگائے گئے ہیں جو ضرورت کے مطابق موڑے جا سکتے ہیں۔اس روبوٹ کو جہازوں کی اندرونی دیواروں کے لئے بنایا گیا تھا۔مستقبل میں اس چھوٹے روبوٹ کو انجن , جنریٹر اور عمارتوں کے پائپ کے اندر رسائی کے لئے استعمال کیا جاسکے گا۔اس کے خاص جوڑ لگے پاؤں اسکو دیواروں سے گرنے سے بچانے کے لئے بنائے گئے ہیں۔جہاز کے انجن کے اندر ٹیڑھے میڑھے راستوں سے گزرنے میں بھی اسکے پاؤں مددگار ثابت ہونگے۔ہمرے نامی اس ننھے روبوٹ پر تجربے کے دوران یہ بات ثابت ہوئی کہ یہ روبوٹ 100 قدم بغیر گرے اٹھا سکتا ہے۔مستقبل میں یہ روبوٹ بڑی بڑی مشینوں کے اندر جاکر تکنیکی مسائل حل کرسکے گا جس سے کمپنیوں کا وقت اور پیسہ دونوں بچ سکے گا۔

To Top