سائنس اور ٹیکنالوجی

ماہرین نے بیکٹیریا سے بجلی بنانے کا کامیاب تجربہ کر لیا

بوسٹن: میسا چیوسیٹس انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی (ایم آئی ٹی)نامی تحقیقی ادارے کے ماہرین نے بیکٹیریا سے بجلی پیدا کرنے کا کامیاب تجربہ کیا ہے۔اس سلسلے میں ماہرین نے بجلی پیدا کرنے والے بیکٹیریا کو الگ کرنے اور ان کی درجہ بندی کا ایک نیا طریقہ وضع کیا ہے۔قدرتی طور پر بہت سے بیکٹیریا (جرثومے) بجلی پیدا کرتے ہیں لیکن انہیں تجربہ گاہوں میں رکھنا اور ان کی تعداد بڑھانا ایک مسئلہ ہےکیونکہ یہ ایک مشکل اور مہنگا کام  ہوتا ہے۔اس مسئلہ کے حل کیلئے ایم آئی ٹی کے ماہرین نے ایک جدید طریقہ ایجاد کیا ہے۔
اس طریقہ میں بیکٹیریا الیکٹران کی خلوی جھلی سے باہر آتا ہے اور اس عمل کو ای ای ٹی یعنی ایکسٹر سیلولر الیکٹران ٹرانسفر کہتے ہیں۔ اس طرح بیکٹیریا کو آسانی سے الگ کر لیا جاتا ہے۔بیکٹیریا کی درجہ بندی کرنا ایک مشکل امر ہوتا ہے۔ جس کیلئے ایک نئی تکنیک ڈائی الیکٹرو فوریسس کو استعمال کیا جاتا ہے۔اس میں دو اقسام کے بیکٹیریا کو الگ کیا جاتا ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ اب وہ وقت دور نہیں جب چھوٹے آلات کو بیکٹیریا کی مدد سے چلایا جا سکے گا۔ اگلے مرحلے میں ماہرین ان پر مشتمل بیٹری بنانے پر کام کریں گے۔

To Top