انٹرنیشنل

خطرناک مگرمچھ اپنے ساتھی کو کھانے کے بعد خاتون کو بھی زندہ نگل گیا

جکارتا: انڈونیشیا کی ایک نجی لیبارٹری میں 17 فٹ لمبے خطرناک مگرمچھ نے 44 سالہ خاتون سائنس دان کو زندہ کھا لیا۔یہ واقع انڈونیشیا کے یوسیکی لیبارٹری میں ہوا جب لیبارٹری کی سربراہ ‘ڈیئسی تووہ’ تجربہ گاہ میں مگر مچھ کو کھانا کھلا رہی تھی اسی دوران مگرمچھ خاتون کو زندہ نگل لیا۔تجربہ گاہ میں اس وقت کوئی اور موجود نہ تھا البتہ جب دیگر ملازمین صبح پہنچے تو انہیں پانی معمول کے مطابق نہیں لگا۔ساری تحقیقات کرنے پر انہیں معلوم ہوا کہ مگرمچھ کے جبڑے میں خاتون کے گوشت کے ٹکڑے موجود تھے۔
ریسکیو اداروں نے مگر مچھ کو پکڑ کر کارروائی شروع کی تو مگر مچھ نے سائنس دان کے جسم کے کچھ حصے اگل دیئے جب کہ کچھ ٹکڑےمگر مچھوں کے تالاب سے برآمد کرلئے گئے۔رپورٹس کے مطابق اس مگرمچھ نے ایک ہفتے قبل اپنے ہی ایک ساتھی کو بھی کھا لیا تھا،جس کے بعد سیکیورٹی بڑھا دی گئی تھی۔ماہرین کا کہنا ہے کہ سائنس دان کا شکار کرنے کے لیے مگر مچھ نے 8 فٹ لمبی چھلانگ لگائی ہوگی، نجی طور پر قائم کی گئی یہ تجربہ گاہ کے مالک کا تاحال پتہ نہیں لگایا جا سکا ہے اور نہ ہی خاتون سائنس دان کی لیبارٹری میں خدمات کے بارے میں خاطر خواہ معلومات اکٹھی ہو سکیں ہیں۔

To Top